مردان:تحت بھائی کا ۸۰ سالہ محمد ارسان بابا، جو تین نسلوں سے اخبار کے فروخت سے وابستہ ہے

تحت بھائی کا ۸۰ سالہ محمد ارسان بابا، جو تین نسلوں سے اخبار کے فروخت سے وابستہ ہے

ارسان بابا کے مطابق تقسیم ہند کے وقت سے وہ بہت چھوٹے عمر میں والد کے ساتھ اخباریں فروخت کرتا تھا اور یہ سلسلہ آب بھی جاری ہے

باباجی پاکستان کے تمام احباریں فروخت بھی کرتا ہے اور پڑھتے بھی ہے تمام حکمرانوں کو اسکے تاریح کے ساتھ لوگوں کو بیان کرتے ہیں

پہلے والد یہ کرتے تھے اسکے کے بعد خود یہ کاروبار جاری رکھا اور آب انکے اولاد بھی اس کاروبار سے وابستہ ہے انہوں نے بتایا

جاوید ارسان جو  محمد ارسان کے تین بیٹوں میں سے ایک ہے اور خود بھی احبار فروشی سے منسلک ہے بتاتے ہے کہ “باباجی کے والد تحت بھائی میں ہوٹل بھی چلاتے تھے اور احبار بھی فروخت کرتے تھے

مزید جانیے جمال صافی کی اس رپورٹ میں